42.1 C
Delhi
مئی 19, 2024
Samaj News

ترکی وشام میں زلزلے سے ہلاکتوں کی تعداد 11200سے تجاوز، 55000زخمی

استنبول-دمشق: ترکی اور شام میں بدھ کو آنے والے شدید زلزلے میں مرنے والوں کی تعداد 11200سے تجاوز کر گئی۔ اس کے ساتھ ہی ریسکیو اہلکار سخت سردی میں ملبے میں پھنسے لوگوں کو بچانے کے لیے پوری جانفشانی سے کام کر رہے ہیں۔ڈان اخبار نے آج رپورٹ کیا کہ پیر کے 7.8شدت کے زلزلے سے ترکی میں 8574اور شام میں 2662افراد ہلاک ہوگئے ، جس سے مجموعی تعداد 11236ہو گئی۔دونوں ممالک کے حکام اور امدادی کارکنوں نے بتایا کہ ترکی میں تقریباً 50000اور شام میں 5000افراد زخمی ہوئے ہیں۔ترک صدر رجب طیب اردگان نے ابتدائی زلزلے کے مرکز میں واقع جنوبی ترک شہر کہرامنمارس کے دورے کے دوران جانی نقصان کے بارے میں معلومات دی۔ٹیلی ویژن نے ایک روتی ہوئی بوڑھی خاتون کو گلے سے لگایا اور ایک بڑے ہجوم میں سے ہلال احمر کے انسانی امدادی خیمے کی طرف چلتے ہوئے دکھایا۔ مسٹر اردگان نے ایک سال کے اندر تباہ شدہ علاقوں کی تعمیر نو کا عزم کیا۔ ترکی کی بدترین تباہی پر سست ردعمل کی وجہ سے حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔ مسٹر اردگان نے ٹیلی ویژن پر کہا’شروع میں ہوائی اڈوں اور سڑکوں کے مسائل تھے ، لیکن آج چیزیں آسان ہو رہی ہیں اور کل یہ مزید آسان ہو جائیں گی‘۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے اپنے تمام وسائل بروئے کار لائے ہیں۔ ملک اپنا کام کر رہا ہے۔ دل دہلا دینے والے مناظر سامنے آ رہے ہیں کہ ایک نوزائیدہ کو ملبے سے زندہ نکالا جا رہا ہے اور ایک باپ اپنی مردہ بیٹی کا ہاتھ پکڑے ہوئے ہے ۔زلزلے کے بعد دو دن اور راتوں تک، امدادی کارکنوں کی ایک فوری فوج نے ٹھنڈ کے موسم میں کھنڈرات میں پھنسے لوگوں کو بچانے کے لیے کام کیا۔ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے سربراہ ٹیڈروس ایڈہینام گیبریئس نے خبردار کیا ہے کہ ہزاروں زخمی اور اب تک پھنسے ہوئے لوگوں کو نکالا جا رہا ہے ۔ ترکی کے شہر کہرامنمارس میں کئی لوگوں نے بار بار آنے والے آفٹر شاکس کے درمیان ٹھنڈی بارش اور برف باری کے درمیان مساجد، اسکولوں اور یہاں تک کہ بس شیلٹرز میں پناہ لی ہے ۔

لوگ سردی سے بچنے کے لیے ملبہ جلاتے رہے ۔ مدد پہنچنے میں تاخیر سے لوگوں میں مایوسی بڑھ رہی ہے ۔علی صغیروگلو نے کہرامنمارس میں کہا’میں اپنے بھائی کو کھنڈرات سے واپس نہیں لا سکتا۔ میں اپنے بھتیجے کو واپس نہیں لا سکتا۔ ادھر ادھر دیکھو خدا کے لیے یہاں کوئی سرکاری اہلکار نہیں ہے‘۔ خلیل السوادی نے کہا’جب ہم کھدائی کر رہے تھے تو ہمیں ایک آواز سنائی دی۔ ہم نے دھول صاف کی اور بچے کو نال (برقرار) کے ساتھ پایا، تو ہم نے اسے کاٹ دیا اور میرے کزن اسے اسپتال لے گئے‘۔بچے کو اپنے قریبی خاندان میں واحد زندہ بچ جانے والے کے طور پر ایک مشکل مستقبل کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے ۔ باقی کو منگل کو اجتماعی قبر میں ایک ساتھ دفن کیا گیا۔امریکہ، ہندستان، چین اور خلیجی ریاستوں سمیت درجنوں ممالک نے مدد کا وعدہ کیا ہے اور سرچ ٹیموں کے ساتھ فضائی راستے سے امدادی سامان پہنچنا شروع ہو گیا ہے ۔ موسم سرما کے طوفان نے کئی سڑکوں زلزلہ نے نقصان پہنچایا جس کے نتیجے میں بعض علاقوں میں کئی کلومیٹر تک ٹریفک جام ہوگیا ہے ۔دریں اثنا، ترک صدر رجب طیب اردگان نے 10جنوب مشرقی صوبوں میں تین ماہ کے لیے ہنگامی حالت کا اعلان کر دیا ہے ۔عالمی ادارہ صحت نے خبردار کیا ہے کہ زلزلے سے 2.3کروڑ افراد متاثر ہو سکتے ہیں۔ انہوں نے مختلف ممالک سے متاثرہ علاقوں میں فوری امداد فراہم کرنے کی درخواست کی ہے ۔

Related posts

امریکہ کے اسکول میں فائرنگ سے 3معصوم بچوں کی موت

www.samajnews.in

آسام میں بند ہوں گے سبھی مدرسے :وزیر اعلیٰ ہیمنت بسوا سرما

www.samajnews.in

کجریوال کا ایجوکیشن ماڈل سنگھی اور مسلم دلت مخالف:کلیم الحفیظ

www.samajnews.in