41.1 C
Delhi
مئی 29, 2024
Samaj News

یوم جمہوریہ پر دنیا نے دیکھی بھارت کی طاقت

نئی دہلی،سماج نیوز: 74ویں یوم جمہوریہ کے موقع پر جمعرات کو یہاں کرتویہ پتھ پر منعقد مرکزی تقریب کے دوران دنیا ہندوستان کی بے پناہ فوجی بہادری کی گواہ بنی۔پریڈ شروع ہونے سے پہلے وزیر اعظم نریندر مودی نیشنل وار میموریل گئے اور وہاں شہیدوں کو خراج عقیدت پیش کیا۔ اس کے بعد روایت کے مطابق قومی ترانے کے بعد قومی پرچم لہرایا گیا۔ بعد ازاں ترنگے کو 21توپوں کی سلامی دی گئی۔ اس سال یوم جمہوریہ کے موقع پر پرانی 25پاؤنڈ توپوں کے بجائے قومی پرچم کو نئی 105ایم ایم انڈین فیلڈ گن سے 21توپوں کی سلامی دی گئی۔ یہ فیصلہ حکومت کی میک ان انڈیا پہل کو آگے بڑھانے کے مقصد سے لیا گیا ہے ۔پریڈ کا آغاز صدر دروپدی مرمو کو سلامی دینے کے ساتھ ہوا۔ پریڈ کی کمانڈ سیکنڈ جنریشن کے فوجی افسر پریڈ کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل دھیرج سیٹھ سنبھال رہے تھے ۔ وہیں میجر جنرل بھونیش کمار، چیف آف اسٹاف، دہلی ایریا، پریڈ کے سیکنڈ ان کمانڈ تھے ۔بہادری کے اعلیٰ ترین اییوم جمہوریہ کے موقع پر کرتویہ پتھ پرمنعقدہ تقریب میں پہلی بار کرنل محمود محمد عبدالفتح الخرساوی کی قیادت میں مصری مسلح افواج کا مشترکہ بینڈ اور مارچنگ دستہ شامل ہوا۔ یہ دستہ 144فوجیوں پر مشتمل تھا، جو مصری مسلح افواج کی اہم شاخوں کی نمائندگی کررہا تھا۔کرتویہ پتھ پر 61کیولری کی وردی میں پہلی ٹکڑی کی قیادت کیپٹن رائے زادہ شوریہ بالی کر رہے تھے ۔ غورطلب ہے کہ 61کیولری دنیا کی واحد خدمت کرنے والی ایکٹیو ہارس کیولری رجمنٹ ہے جس میں تمام ‘اسٹیٹ ہارس یونٹس’ کا مرکب ہے ۔ ہندوستانی فوج کی نمائندگی 61کیولری کے ایک ماؤنٹڈ کالم، نو میکانائزڈکالم، چھ مارچنگ دستے اور آرمی ایوی ایشن کور کے ایڈوانسڈ لائٹ ہیلی کاپٹر (اے ایل ایچ) کے ذریعے فلائی پاسٹ سے کیاگیا۔ اس دوران مین جنگی ٹینک ارجن، ناگ میزائل سسٹم، بی ایم پی-2 سارتھ انفنٹری فائٹنگ وہیکل، کوئیک ری ایکشن فائٹنگ وہیکل، کے -9وجر ٹریکڈ سیلف-پروپیلڈ ہووتزر گن، برہموس میزائل، 10 میٹر شارٹ اسپین برج، موبائل مائکروویونوڈ اینڈ میکانائزڈ کالم میں موبائل نیٹ ورک سینٹر اور آکاش (نئی نسل کا سامان) مرکزی توجہ کا مرکز تھے ۔وہیں میکانائزڈ انفنٹری رجمنٹ، پنجاب رجمنٹ، مراٹھا لائٹ انفنٹری رجمنٹ، ڈوگرہ رجمنٹ، بہار رجمنٹ اور گورکھا بریگیڈ سمیت فوج کی کل چھ یونٹس نے سلامی اسٹیج کے سامنے مارچ پاسٹ کیا۔ یومِ جمہوریہ کی پریڈ کے دوران ملک کی فوجی طاقت، ثقافتی گوناگونیت، خود انحصاری کے اقدامات، خواتین کو بااختیار بنانے اور ایک نئے بھارت کے اُبھرنے کی نمائش کی گئی۔ مصر کے صدر عبدالفتاح السیسی یوم جمہوریہ کے موقع پر منعقدہ تقریب میں مہمان خصوصی کے طور پر موجود تھے ۔ اس مرتبہ کرتویہ پتھ پر جھانکی کا موضوع جوش، حب الوطنی کا جذبہ اور عوام کی شرکت پر مبنی تھا ۔ اس بار ملک کے شاندار ثقافتی ورثے ، معاشی ترقی اور مضبوط اندرونی و بیرونی سلامتی کی عکاسی کرنے والی 23جھانکیاں نکالی گئیں ،جن میں مختلف ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں سے 17اور مختلف وزارتوں؍محکموں کی چھ جھانکیاں شامل تھیں۔ اس سال ڈیفنس ریسرچ اینڈ ڈیولپمنٹ آرگنائزیشن (ڈی آر ڈی او) کی جھانکی کا موضوع ‘موثر نگرانی، مواصلات اور خطرات کو بے اثر کرکے قوم کو محفوظ بنانا’ تھا۔ اس کے پہلے حصے میں انڈرواٹر سرویلانس پلیٹ فارم کی نمائش کی گئی، جس میں آبدوزوں کے لیے یوشس-2نما سونار، بحری جہازوں کے لیے ہمسا سیریز کے سونار اور ہیلی کاپٹر لانچ کی نگرانی کے لیے کم فرکوینسی والے ڈنکنگ سونار شامل تھے ۔ جبکہ، دوسرے حصہ میں ڈی 4 کاونٹر ڈرون سسٹم کی نمائش کرنے والے لینڈ سرویلانس، مواصلات اور نیوٹرلائزنگ پلیٹ فارم تھے ، جو ریئل ٹائم سرچ، ڈی ٹیکشن ، ٹریکنگ اور ہدف کو بے اثر کرنے میں اہل تھے ۔ ڈی آر ڈی او کی جھانکی میں کوئیک ری ایکشن سرفیس ٹو ایئر میزائل ویپن سسٹم، بیٹری ملٹی فنکشن ریڈار اور میزائل لانچر وہیکل کے دو یونٹ کی بھی نمائش کی گئی ۔

Related posts

ساجدہ سکندر کور کمیٹی ممبر آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کی زیر سرپرستی محبوب نگر تلنگانہ میں بابا بھیم راؤ امبیڈکر پر سالانہ جلسے کا انعقاد

www.samajnews.in

کرتارپور: سرحدوں کی فکر چھوڑ کر اپنوں سے ملنے آتے ہیں لوگ

www.samajnews.in

ریوڑی کلچرپر الیکشن کمیشن سخت

سبھی پارٹیوں کو بھیجا خط، 19 اکتوبر تک جواب داخل کرنے کی ہدایت:

www.samajnews.in