41.1 C
Delhi
مئی 29, 2024
Samaj News

’آپ‘-بی جے پی کونسلروں میں جم کر مارپیٹ، اسٹینڈنگ کمیٹی کا الیکشن ردّ

نئی دہلی، سماج نیوز: دہلی میونسپل کارپوریشن (ایم سی ڈی) کی ایک اہم باڈی اسٹینڈنگ کمیٹی کے 6ارکان کے انتخاب کے لیے ووٹوں کی گنتی کے دوران آج عام آدمی پارٹی اور بی جے پی کونسلروں کے درمیان خوب جم کر مارپیٹ ہوئی۔ ایم سی ڈی ہاؤس میں دوپہر سے شروع ہونے والا ہنگامہ رات تک جاری رہا۔ آخر کار رات نو بجے کے بعد دہلی میونسپل کارپوریشن کی اسٹینڈنگ کمیٹی کا الیکشن منسوخ کر دیا گیا۔ اب ایوان کا اجلاس 27 فروری کو ہوگا۔ میونسپل کارپوریشن میں آج ووٹوں کی گنتی میں اس وقت خلل پڑا جب بی جے پی نے ایک ووٹ کے باطل ہونے پر اعتراض کیا۔ سب سے پہلے حکمراں جماعت عام آدمی پارٹی (اے اے پی) اور بی جے پی کے ارکان میزوں پر چڑھ گئے اور دہلی میونسپل کارپوریشن ہاؤس میں ایک دوسرے کے خلاف نعرے لگانے لگے۔ بعد ازاں ہاتھا پائی بھی ہوئی۔ کونسلرز کے درمیان جھگڑا ہوا۔ ایک خاتون کے بال بھی کھینچے گئے۔ بی جے پی کاؤنسلروں نے کہا کہ وہ دوبارہ گنتی کی اجازت نہیں دیں گے۔میئر کے ایک ووٹ کو غلط قرار دینے کے بعد بی جے پی نے ووٹوں کی گنتی میں رکاوٹ ڈالی۔ تاہم میئر کا اصرار تھا کہ غلط ووٹ کے بغیر نتیجہ کا اعلان کیا جائے۔ اس کے بعد ایم سی ڈی ہاؤس میں افراتفری پھیل گئی۔ دونوں طرف کے کونسلرز نے ایک دوسرے کو مکے مارے، لاتیں ماریں، تھپڑ مارے اور ایک دوسرے کو دھکا دیا۔ بعض کونسلروں کے کرتے پھٹے نظر آئے۔ ایک کونسلر بھی گر گیا۔آپ کی میئر شیلی اوبرائے جو اس ہفتے کے شروع میں دو ماہ کی تاخیر کے بعد میئر منتخب ہوئے تھے، نے ووٹ کو غلط قرار دیا۔ اس کی وجہ سے وہ ناراض بی جے پی کونسلروں کے نشانے پر آگئیں۔ بی جے پی کونسلروں نے اس پر چیخ کر کہا کہ تم ہوش میں نہیں ہو۔کچھ بی جے پی کونسلروں نے ’’جئے شری رام‘‘ کے نعرے لگائے اور وزیر اعظم نریندر مودی کی تعریف کی۔ عام آدمی پارٹی کے ان کے حریفوں نے ’’عام آدمی پارٹی زندہ باد، اروند کجریوال زندہ باد‘‘ کے نعرے لگاتے ہوئے جوابی کارروائی کی۔میئر شیلی اوبرائے نے کہا- ایک فریق دوبارہ گنتی کے لیے تیار ہے جبکہ دوسری طرف تیار نہیں، اس لیے اب میں دوبارہ گنتی نہیں کر رہی ہوں۔ نتیجہ غلط ووٹ کے بغیر بنایا جا رہا ہے۔ اس کے بعد ایم سی ڈی میں اسٹینڈنگ کمیٹی کے انتخابات کے لیے ووٹوں کی گنتی میں مسلسل تعطل کا شکار رہا۔ دونوں فریق ایک دوسرے پر الزامات لگاتے رہے اور ہاتھا پائی بھی کرتے رہے۔طویل تعطل کے بعد میئر ایوان میں آئے۔ اس دوران بی جے پی کے کونسلر ایوان سے باہر چلے گئے تھے اور صرف عام آدمی پارٹی کے کونسلر ہی موجود تھے۔ میئر شیلی اوبرائے کی ہدایت پر تمام عہدیداروں کو گھر بلایا گیا۔عام آدمی پارٹی کے ایم ایل اے درگیش پاٹھک نے کہا کہ آج غنڈہ گردی کی گئی ہے۔ اگر یہ ایوان اپنے میئر کی حفاظت نہیں کر سکتا تو اس سے زیادہ شرمناک اور کوئی بات نہیں۔ اسی دوران بی جے پی کونسلر ایوان میں داخل ہوئے۔ درگیش پاٹھک نے کارپوریشن سکریٹری بھگوان سنگھ پر الزام لگایا۔ اس نے جب بھی پوچھا تو کہا کہ وہ کچھ نہیں جانتے۔ ایسا لگتا ہے کہ یہ شخص پوری طرح سے بی جے پی سے جڑا ہوا ہے۔ اس پر بی جے پی نے اعتراض کیا ہے۔جس کے بعد قائمہ کمیٹی کا انتخاب منسوخ کر دیا گیا۔ دہلی میونسپل کارپوریشن کی میٹنگ ملتوی کر دی گئی۔ اب ایوان کا اجلاس 27 فروری کو ہوگا۔ قائمہ کمیٹی کا انتخاب دوبارہ ہوگا۔اس دوران ایم سی ڈی کے باہر بی جے پی کارکنوں کا ایک اجتماع تھا۔ وہ نعرے لگا رہے تھے۔ بی جے پی لیڈر وجندر گپتا نے کہا کہ پارٹی کے 10 کونسلر زخمی ہوئے ہیں۔ بی جے پی عام آدمی پارٹی کے آتشی کے خلاف مقدمہ درج کرے گی۔بی جے پی لیڈر ہریش کھورانہ نے کہا کہ بی جے پی میئر کے فیصلے کے خلاف عدالت جائے گی۔ الیکشن کمیشن کی کمیٹی نے الیکشن کی رپورٹ میئر کو دی تو میئر کو الیکشن کالعدم قرار دینے کا حق نہیں ہے۔ایم سی ڈی اسٹینڈنگ کمیٹی کے انتخابات کو منسوخ کرنے کے بعد میئر شیلی اوبرائے نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ بی جے پی کے کونسلروں نے تمام بیلٹ پیپرز پھاڑ دیئے، اس لیے 27 فروری کو دوبارہ انتخابات کرائے جائیں گے۔ میئر نے کہا کہ ہم نے بی جے پی کی شرائط مان کر الیکشن شروع کیا، لیکن خود کو ہارتا دیکھ کر بی جے پی نے ہنگامہ کھڑا کردیا۔ بی جے پی کے کونسلر روی نیگی، چندن چودھری اور مرواہ نے میری کرسی کھینچی، مجھ پر حملہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے آشو ٹھاکر، چندن چودھری پر حملہ کیا گیا۔ اس کی شال کھینچی گئی۔عام آدمی پارٹی (اے اے پی) نے ایک ویڈیو کے ذریعے دکھایا کہ کس طرح بی جے پی نے میئر پر حملہ کیا۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ ارجن مرواہ نے میئر کو نیچے دھکیل دیا۔ آشو ٹھاکر کو دوپٹہ گلے میں ڈال کر کھینچا گیا۔عام آدمی پارٹی کے لیڈر سوربھ بھردواج نے این ڈی ٹی وی کو بتایا کہ ہم نے بڑی مشکل سے شیلی اوبرائے کی جان بچائی۔ ہم نے اسپیشل کمشنر آف پولس دیپیندر پاٹھک سے فون پر بات کی۔ اس نے مدد کا یقین دلایا لیکن مدد نہیں آئی۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کہہ رہی ہے کہ ووٹ کو غیر قانونی قرار دینا غلط تھا، اس لیے میں ملک کے تمام ماہرین قانون کو دعوت دیتا ہوں کہ وہ آئیں اور دیکھیں کہ یہ قانونی ہے یا غیر قانونی۔ اگر ہم مان بھی لیں کہ کوئی فیصلہ غیر آئینی طور پر لیا گیا ہے تو کیا ہم حملہ اور قتل کا سہارا لیں گے؟ ڈپٹی گورنر روزانہ غیر آئینی کام کرتا ہے، ہم اس کے ساتھ ایسا سلوک نہیں کرتے۔عام آدمی پارٹی کے زیر اقتدار میونسپل کارپوریشن دہلی کے 250 کارپوریٹروں میں سے کم از کم 242 نے ایم سی ڈی کی اسٹینڈنگ کمیٹی کے چھ ممبران کو منتخب کرنے کے لیے ووٹ دیا۔ سٹینڈنگ کمیٹی میونسپل کارپوریشن کا ایک طاقتور ادارہ ہے جو فیصلہ کرتی ہے کہ فنڈز کو کس طرح استعمال کیا جائے اور کن منصوبوں پر۔قائمہ کمیٹی کے انتخابات میں سات امیدوار میدان میں ہیں۔ عام آدمی پارٹی نے امل ملک، رامندر کور، موہنی جنوال اور ساریکا چودھری کو نامزد کیا ہے۔ بی جے پی نے کمل جیت سہراوت اور پنکج لوتھرا کو میدان میں اتارا ہے۔ بی جے پی میں شامل ہونے والے آزاد کونسلر گجیندر سنگھ درال بھی امیدوار ہیں۔

Related posts

ڈاکٹر نوہیرا شیخ نے سپریم کورٹ میں جمع کئے 641کروڑ روپئے، ہیرا گروپ نے عدالت عظمیٰ سے کیا ہوا اپنا وعدہ پورا کیا

www.samajnews.in

موربی حادثہ: پل گرنے کیلئے تکنیکی خامی نہیں بلکہ انسانی لاپروائی اور لالچ ذمہ دار

www.samajnews.in

سعودی عرب کی 60فیصد آبادی وزن میں زیادتی اور موٹاپے کا شکار

www.samajnews.in