41.1 C
Delhi
مئی 29, 2024
Samaj News

جموں و کشمیر ہمارا تھا اور رہے گا، پاکستان کو دوٹوک جواب

جنیوا، سماج نیوز: اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل (یو این ایچ آر سی) میں پاکستان کی وزیر مملکت برائے خارجہ امور حنا ربانی (حنا ربانی کھر) نے ایک بار پھر بھارت پر جھوٹے الزامات لگانے کی کوشش کی۔ بھارت نے ان کے الزامات کا منہ توڑ جواب دیا ہے۔ حنا ربانی کے الزامات کا جواب دیتے ہوئے جنیوا میں بھارتی سفارت کار سیما پوجانی نے پاکستان کو دہشت گردی پھیلانے والا ملک قرار دیا۔ بھارت نے کہا کہ پاکستان بھارت کے خلاف پروپیگنڈا کر رہا ہے۔ پوجانی نے کہا کہ جموں-کشمیر اور لداخ یونین ٹیریٹری کے پورے علاقے ہندوستان کا حصہ تھے، ہیں اور ہمیشہ رہیں گے۔سیما پوجانی نے کہا’پاکستان کے نمائندے نے ایک بار پھر بھارت کے خلاف اپنے بدنیتی پر مبنی پروپیگنڈے کے لیے اس باوقار پلیٹ فارم کا غلط استعمال کیا ہے۔ انسانی حقوق پر پاکستان کی بات ایک مذاق ہے۔ آواز اٹھانے والے پاکستان میں غائب ہو جاتے ہیں‘۔ انہوں نے کہا کہ’پاکستان کے اپنے کمیشن آف انکوائری کو گزشتہ دہائی میں گمشدگیوں کی 8463 شکایات موصول ہوئی ہیں‘۔پوجانی نے کہا’پاکستان کا بھارت کے ساتھ جنون دیکھیں، ایک طرف اس کی آبادی اپنی زندگی، معاش اور آزادی کی جنگ لڑ رہی ہے، لیکن دوسری طرف یہ ملک بھارت کے خلاف پروپیگنڈہ کر رہا ہے، یہ پاکستان کی غلط ترجیحات کی نشانی ہے‘۔ اس کی قیادت اور افسران کو مشورہ دیں گے کہ وہ اپنی توانائی کو بروئے کار لائیں اور کام پر توجہ دیں۔پڑوسی ملک میں اقلیتوں پر ہونے والے مظالم پر روشنی ڈالتے ہوئے، سیما پجانی نے کہا’پاکستان میں اقلیتوں کے لیے مذہبی آزادی نہیں ہے۔ وہ اپنے مذہب پر عمل نہیں کر سکتے۔ احمدیہ برادری کو صرف ان کے عقیدے پر عمل کرنے کے لیے ستایا جاتا ہے‘۔ سیما پوجانی نے کہا ’ہمیں ترکی کی طرف سے ہندوستان کے اندرونی معاملے پر کیے گئے تبصروں پر افسوس ہے۔ ترکی کو یہ بھی مشورہ دیتے ہیں کہ وہ ہمارے اندرونی معاملات پر ناپسندیدہ تبصرے کرنے سے باز رہے‘۔ انہوں نے کہا’جہاں تک او آئی سی کے بیان کا تعلق ہے، ہم جموں و کشمیر کے مرکز کے زیر انتظام علاقے کے نامناسب حوالہ جات کو مسترد کرتے ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ جموں و کشمیر کا مرکزی علاقہ اور لداخ کا پورا خطہ بھارت کا حصہ تھا، اور ہمیشہ رہے گا‘۔ پوجانی نے کہا ’پاکستان ہندوستانی سرزمین پر غیر قانونی قبضے میں ہے‘۔ او آئی سی نے اپنے رکن پاکستان کو اپنے پلیٹ فارم کا غلط استعمال کرنے کی اجازت دی ہے بجائے اس کے کہ وہ ریاستی سرپرستی میں ہونے والی دہشت گردی کو ترک کرے اور ہندوستانی علاقے سے اپنا قبضہ ختم کرے۔ پاکستان او آئی سی فورم اسے پھیلانے کے لیے استعمال کر رہا ہے۔ بھارت کے خلاف بدنیتی پر مبنی پروپیگنڈاپاکستان کی سرپرستی میں ہونے والی دہشت گردی کو بے نقاب کرتے ہوئے، ہندوستانی سفارت کار نے کہا’پاکستان نے ہمیشہ دہشت گردوں کو تحفظ فراہم کیا ہے۔ دہشت گرد حافظ سعید اور دہشت گرد مسعود اظہر کو برسوں سے پالا گیا ہے۔ دہشت گرد اسامہ بن لادن پاکستانی فوج کا دفاع ہے‘۔ کالونی کے ساتھ ہی رہتا تھا۔

Related posts

عمیر احمد کے تلاش میں مدد کی اپیل، شاہین باغ دہلی سے غائب ہیں انتظار احمد کے صاحبزادے

www.samajnews.in

آرٹیکل 370 ختم کرنے کا فیصلہ درست: سپریم کورٹ

www.samajnews.in

کووڈ کا پھر ستا رہا خوف، مہاراشٹر، کیرالہ سمیت 6ریاستوں کیلئے الرٹ جاری

www.samajnews.in