41.1 C
Delhi
مئی 29, 2024
Samaj News

کرناٹک کی تمام سیٹوں پرMEPلڑے گی الیکشن

پارٹی اور کارکن زمینی سطح پر کام کر رہے ہیں: عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ

نئی دہلی، سماج نیوز: ( مطیع الرحمٰن عزیز) کرناٹک میدان سیاست میں ہمارے لئے وہ سرزمین ہے جسے ہم آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کی تاریخ میں کبھی بھلا نہیں سکیںگے۔ کرناٹک ہی وہ ریاست ہے جہاں سے آل انڈیا مہیلا امپارمنٹ پارٹی نے اپنے قیام کے بعد پہلا الیکشن لڑا اور میدان سیاست کے ماہرین کے دانت کھٹے کردئے۔ کئی لوگوں کو میدان سے بھاگنا پڑا۔ تو کئی لوگ یہ کہتے ہوئے نظر آئے کہ اب ذات پات بھائی برادری اورچھوا چھوت کی بات کرنا اور کھوکھلے وعدے دعوے اور تقریروں سے لوگوں کو متاثر کرنا ڈرانا دھمکانا آسان کام نہیں رہ گیاہے۔ کام کی نیت کرنی ہوگی اور نہ صرف نیت سے کام چلے گا بلکہ اثر دار کام نہ دکھایا گیا تو صفحہ ہستی اور باپ داداؤں کی بنائی گئی سیاست کی زمین سے ہاتھ دھونا پڑے گا۔ لہذا ان باتوں کا خلاصہ کلام یہ ہے کہ آنے والے الیکشن میں ہماری پارٹی آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی مکمل طاقت سے اور تمام ریاست بھر کی سیٹوں پر قسمت آزمائی کرے گی۔ اس چیز کے لئے ریاست شہر شہر ، گاؤں گاؤں اور گلی گلی اور کوچے کوچے میں ہمارے کارکن کام کر رہے ہیں۔ کل ملا کر ریاست کرناٹک کے الیکشن میں ہم پوری تیاری اور جور و شورکے ساتھ الیکشن لڑیں گے۔ ان خیالات کا اظہار عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ کل ہند صدر مہیلا امپاپورمنٹ پارٹی نے اپنے جاری ایک بیان میں کیا ہے۔

ان باتوں کی معلومات اتر پردیش کارگزار صدر مطیع الرحمن عزیز نے دیتے ہوئے کہا کہ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ ہندستانی سیاست کا وہ روشن مستقبل اور سورج کی طرح ہیں جو سیاست کی زمین پر نمودار ہونے کے بعد خطہ ہندستان کی سرزمین کا کوئی حصہ ایسا نہیں بچے گا جہاں وہ اپنی خدمت اور کام کاج کو لے کر نہ پہنچی ہوں۔ اور سیاست ہی وہ پلیٹ فارم ہے جہاں سے حکومتی ایوانوں کو ان کے نہ کئے گئے کاموں کا برملا خلاصہ کرتے ہوئے انہیں یہ باور کراسکتے ہیں کہ کام کس طرح کیا جاتا ہے۔ اور سرکاری بجٹ جو لاکھوں کروڑ روپیوں کی تعداد میں عوام کے لئے الاٹ کئے جاتے ہیں وہ کب کہاں خرچ کیا گیا۔ ان سب چیزوں کا حساب کرنے کے لئے عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ جیسی جرئتمند شخصیت ہی مناسب ہوں گی جنہیں نہ کسی کے روپئے کی ضرورت ہے اور نہ پیسے کی۔ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ خودکفیل بھی ہیں اور باہمت بھی ۔ باکردار بھی ہیں اور بدعنوانی سے پاک خدمت گزاربھی۔ اس لئے عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ سے گھبرانے کی ان سیاستدانوں کو ضرورت نہیں ہے جو ایماندار ہیں اور کام کرنا اپنے لئے فرض سمجھتے ہیں۔ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ سے غیر مطمئن اور ڈرے ہوئے وہ لوگ ہیں جن کی سیاست میں چوری اور ڈکیتی بدعنوانی اور تخریب چھپی ہوئی ہے۔کل ملا کر آنے والے ہندستان کی سیاست میں اب بات صرف کام کی ہو گی۔ بدعنوانی، کرپشن کرکے لوگوں کو کھوکھلے وعدے کرکے آسانی سے چھٹکارہ نہیں مل سکے گا۔

کرناٹک میں آنے والے چند مہینے بعد کے الیکشن کی تیاری میں محمد شریف کارگزار صدر برائے کرناٹک پوری مستعدی اور ہوشمندی سے لوگوں سے رابطے شروع کر چکے ہیں۔ اس کے علاوہ عبد الرحمن۔ عمران پہلوان۔ ڈاکٹر سمیرا پاشااور جاوید ابراہیم کی سرکردگی میں کرناٹک کے چپے چپے پر آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کے اثر دیکھے جانے لگے ہیں۔ 2023 کے لوک سبھا الیکشن برائے کرناٹک میں آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی ان پارٹیوں سے اتحاد کرنے کی سمت بھی اپنا رویہ نرم بنائے ہوئے ہے جو حب الوطنی ، جمہوریت اور بھائی چارہ میں یقین رکھنے والے ہوں۔ اس طرح سے کرناٹک ریاستی الیکشن میں آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کے اثر دوبالہ ہو جائیں گے اور لوگوں کو خدمت گزار لیڈران کے ذریعہ بدعنوان نیتاؤں سے چھٹکارہ کے اسباب پیدا سکیں گے۔ عالمہ ڈاکٹر نوہیرا شیخ سیاست میں نقصان کرنے والے ان لیڈران سے کافی زیادہ فکر مند ہیں جو دور دراز کے علاقوںمیں بلا کام اور خدمت کے صرف الیکشن کے پندرہ روز پہلے جاتے ہیں اور وہاں کی آب وہوا کو آلودہ کرنے کا کام کرتے ہیں۔ قومی صدر برائے آل انڈیا مہیلا امپاورمنٹ پارٹی کا کہنا یہ ہے کہ اتحاد ہی ملک کی اصل طاقت ہے۔ ہماری پارٹی اے آئی ایم ای پی ہر حالت میں ملک کی دیگر سیاسی پارٹیوں سے اتحاد کرکے وہاں کے اپنے لوکل نمائندوں کے ذریعہ سال کے تین سو پیسٹھ دن اور بارہ مہینے کے ہر روز مستعدی کے ساتھ کام اور خدمت خلق کا ثبوت دیتے ہوئے ملک میں ہمارے آبا واجداد کا بھارت پھر سے لوٹانا ہے۔ ملک میں بہتی گندی اور زہریلی آب وہوا کو مات دے کر ترقی کے راستے پر گامزن کرنا ہے۔ ہمارا ملک واقعی میں سونے کی چڑیا ہے مگر ہمارے ملک کے بدعنوان اور نفرت پھیلانے والے نیتاؤں نے ملک کی آب وہوا کو ہی زہر آلود نہیں کیا بلکہ ہمارے ملک کی ترقی کو تنزلی میں بدل دیا ہے لہذاہماری پارٹی ایم ای پی اور ہمارے تمام کارکنان کو محبت کا پیغام لے کر ملک کے ہر ہر فرد تک جانا ہے۔

Related posts

کمزور دِل کا مضبوط صحافی

www.samajnews.in

ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کا بھارت میں خیر مقدم کرتے ہیں

www.samajnews.in

آئندہ پارلیمانی انتخابات میں پون کھڑا کو دہلی سے کانگریس کا بنایا جائے امیدوار

www.samajnews.in