33.1 C
Delhi
جولائی 25, 2024
Samaj News

گوگل کے ایک فیصلے نے ہندوستان میں 12ہزار افراد کو کیا بے روزگار

واشنگٹن: گوگل کی پیرنٹ کمپنی الفابیٹ انک نے اپنے 12000 ملازمین کو فارغ کرنے کا اعلان کیا ہے جو کہ اس کی کل افرادی قوت کا 6 فیصد بنتا ہے۔ ایک ساتھ اتنے لوگوں کو نوکری سے نکالنے کے بعد بھی گوگل کے سرمایہ کار مطمئن نہیں ہیں۔ گوگل کے سب سے بڑے سرمایہ کار برٹش ہیج فنڈ کے کرسٹوفر ہون نے 1.5لاکھ ملازمین کو فارغ کرنے کا کہا ہے۔ ہان کی نظر میں یہ ملازمین گوگل کے ‘اوور پیڈ ورکرز ہیں۔ اس کے لیے انہوں نے گوگل اور الفابیٹ کے سی ای او سندر پچائی کو خط بھی لکھا ہے۔ ہون نے پچائی کو کمپنی کے کل ملازمین میں سے 20 فیصد کو ہٹانے کا مشورہ دیا ہے۔ درحقیقت 20 جنوری کو کرسٹوفر ہون نے برطرفی کے بارے میں سندر پچائی کو ایک خط لکھا تھا، جو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہا ہے۔ خط کے آغاز میں ہین نے گوگل کے سی ای او کو 12000 ملازمین کو فارغ کرنے پر مبارکباد دی۔ انہوں نے لکھا- ‘گوگل کے 12000 ملازمین کو ہٹانا درست سمت میں ایک قدم ہے، لیکن اس سے 2022 میں بڑے پیمانے پر بڑھی ہوئی افرادی قوت کو واپس نہیں لایا جا سکتا ہے۔ آخر کار، انتظامیہ کو اس سے آگے بڑھنے کی ضرورت ہے۔اس خبر کا تعلق خصوصاً ہندوستان سے ہے۔ گوگل نے اپنے پروگرام الیکٹرانک ریویو مینجمنٹ (پی ای آر ایم) کو روک دیا ہے، جو ایمپلائر اسپانسرڈ گرین کارڈ حاصل کرنے میں اہم کردار نبھاتا ہے۔ گوگل نے بیرون ملکی ملازمین کو ای میل بھیجا ہے جس میں انھیں مطلع کیا گیا ہے کہ کمپنی پی ای آر ایم کی کسی بھی نئی فائلنگ کو روک رہا ہے۔ اس سے بیرون ملکی ملازمین کا مستقبل خطرے میں پڑ گیا ہے۔ایک کمپنی ملازم کو موصول ای میل کے مطابق ’’یہ سمجھتے ہوئے کہ یہ خبر آپ اور آپ کی فیملی میں سے کچھ کو کس طرح متاثر کر سکتا ہے، نئے پی ای آر ایم ایپلی کیشنز کو روکنے سے متعلق ہمیں جو مشکل فیصلہ لینا پڑا ہے، میں اس کے بارے میں آپ کو جلد از جلد اَپڈیٹ کرنا چاہتا تھے۔ یہ دیگر ویزا درخواستوں یا پروگراموں کو متاثر نہیں کرتا ہے‘‘۔گوگل کے ایک ملازم نے ٹیم بلائنڈ پر ای میل پوسٹ کیا ہے جو سرٹیفائیڈ آئی ٹی ملازمین کیلئے ایک سوشل نیٹورکنگ سائٹ ہے۔ پی ای آر ایم درخواست گرین کارڈ (مستقل رہائش) عمل میں ایک اہم ترین پہلا قدم ہے۔ اس عمل میں ایمپلائر (ملازمت دینے والا) کو یہ ظاہر کرنے کی ضرورت ہوتی ہے کہ خاص کردار کیلئے کوئی اہل امریکی ملازم دستیاب نہیں ہے، جو آج کے لیبر مارکیٹ کو حمایت دینے کیلئے ہمارے لیے ایک مشکل حالت رہی ہے۔گوگل ای میل کے مطابق کئی ٹیک کمپنیوں نے اپنے ملازمین کی تعداد میں تخفیف (تقرری پر روک؍چھنٹنی) کے اعلان کے ساتھ یہ بھی بتایا ہے کہ ملازمت کی تلاش کرنے والے لوگوں میں اضافہ ہوا ہے۔ حالانکہ گوگل نے کہا ہے کہ وہ پہلے سے جمع کردہ پی ای آر ایم ایپلی کیشنز کی حمایت کرنا جاری رکھے گا۔ موجودہ پی ای آر ایم ایکٹ 2005 سے نافذ ہے۔ واضح رہے کہ پی ای آر ایم ایک خاص وقت پر ایک خاص جگہ میں ایک خاص ملازمت کی حالت کے لیے لیبر ڈیپارٹمنٹ (ڈی او ایل) سے سرٹیفکیشن حاصل کرنے کے لیے ایک درخواست ہے۔

Related posts

نوٹ پر گاندھی کیساتھ لکشمی گنیش کی ہو تصویر:اروندکجریوال

www.samajnews.in

کیسے بدل گئی ایک ہفتے میں اڈانی کی قسمت؟ جانئے پورا ماجرا

www.samajnews.in

اترپردیش میں نہیں ہوں گے بلدیاتی انتخاب

www.samajnews.in