42.1 C
Delhi
مئی 19, 2024
Samaj News

تین غریب لڑکیوں سے ملنے کے بعد ٹی شرٹ پہننے کا لیا فیصلہ

’’مدھیہ پردیش میں ’بھارت جوڑو یاترا‘ کے دوران ایک دن تین غریب لڑکیاں پھٹے ہوئے کپڑوں میں میرے پاس آئیں… جب میں نے انہیں پکڑا تو وہ کانپ رہی تھیں کیونکہ وہ ٹھیک سے کپڑے نہیں پہنے ہوئے تھے، اس دن میں نے فیصلہ کیا کہ میں تب تک ٹی شرٹ پہنوں گا جب تک میں کانپ نہیں جاتا‘‘

چنڈی گڑھ: سخت سردی کے باوجود ’بھارت جوڈو یاترا‘ کے دوران ٹی شرٹ پہننے پر جاری بحث کے درمیان کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے پیر کو کہا کہ انہوں نے مدھیہ پردیش میں ’’پھٹے ہوئے کپڑے‘‘ دیکھے ہیں۔ تین غریبوں سے ملنے کے بعد ’’میں کانپ گیا‘‘۔ وہ لڑکیاں جنہوں نے مارچ کے دوران صرف ٹی شرٹس پہننے کا فیصلہ کیا۔ راہل نے کہا’’لوگ مجھ سے پوچھتے ہیں کہ میں نے یہ سفید ٹی شرٹ کیوں پہنی ہے، کیا مجھے سردی نہیں لگتی؟‘‘ میں آپ کو وجہ بتاتا ہوں۔ جب یاترا شروع ہوئی تو کیرالہ میں موسم گرم اور مرطوب تھا، لیکن جب ہم مدھیہ پردیش میں داخل ہوئے تو یہاں بہت زیادہ ٹھنڈا تھا۔ امبالا، ہریانہ میں ایک نکڑ سبھا سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا’’ایک دن تین غریب لڑکیاں پھٹے ہوئے کپڑوں میں میرے پاس آئیں… جب میں نے انہیں پکڑا تو وہ کانپ رہی تھیں کیونکہ وہ ٹھیک سے کپڑے نہیں پہنے ہوئے تھے۔ اس دن میں نے فیصلہ کیا کہ میں تب تک ٹی شرٹ پہنوں گا جب تک میں کانپ نہیں جاتا‘‘۔ گاندھی نے کہا کہ وہ ان لڑکیوں کو پیغام دینا چاہتے ہیں۔ راہل گاندھی نے کہا کہ جب میں سردی سے کانپنے لگوں گا تو سوئٹر پہننے کے بارے میں سوچوں گا۔ میں ان تین لڑکیوں کو پیغام دینا چاہتا ہوں کہ اگر آپ کو سردی لگ رہی ہے تو راہل گاندھی کو بھی سردی لگ رہی ہوگی۔

Related posts

کنگ چارلس کی تاجپوشی اگلے سال 6 مئی کو

www.samajnews.in

ملک کی 40 فیصد سے زیادہ دولت ایک فیصد کے پاس

www.samajnews.in

حیدرآباد:عبدالحق محمدی بن سرور محمدی کا انتقال

www.samajnews.in