42.1 C
Delhi
مئی 19, 2024
Samaj News

چھ ہزار کروڑ کے ٹول ٹیکس گھوٹالہ کی تحقیقات کیوں نہیں؟

دہلی کے نائب وزیر اعلیٰ منیش سسودیا جی نے 2مہینے پہلے ایل جی کو تمام دستاویزات کیساتھ ایک خط لکھا تھا جس میں تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا تھا،کیا اس گھوٹالے میں بی جے پی کا کوئی بڑا لیڈر ملوث ہے جو ایل جی جانچ کرانے سے بھاگ رہے ہیں ؟:درگیش پاٹھک

نئی دہلی، سماج نیوز:آپ کے ایم ایل اے اور ایم سی ڈی کے انچارج درگیش پاٹھک نے کہا کہ ایل جی ونے سکسینہ نے بی جے پی کے زیر اقتدار ایم سی ڈی کے 6 ہزار کروڑ کے ٹول ٹیکس گھوٹالہ کی تحقیقات کا ابھی تک حکم نہیں دیا ہے۔ دہلی کے نائب وزیر اعلیٰ منیش سسودیا نے 2 ماہ قبل تمام دستاویزات کے ساتھ ایل جی کو خط لکھ کر تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا۔ایل جی صاحب ہر روز عام آدمی پارٹی کے خلاف نئی تحقیقات کا حکم دیتے ہیں لیکن انہیں کچھ نہیں ملتا۔ کیا اس گھوٹالے میں بی جے پی کا کوئی بڑا لیڈر ملوث ہے جو ایل جی جانچ کرانے سے بھاگ رہے ہیں؟ جمعرات کو ایک اہم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے عام آدمی پارٹی کے سینئر لیڈر، ایم ایل اے اور ایم سی ڈی انچارج درگیش پاٹھک نے کہا کہ آج سے تقریباً 2 ماہ قبل ہم نے دہلی کے لوگوں کے سامنے بہت سارے دستاویزات رکھے تھے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی ایم سی ڈی میں تقریباً 6 ہزار کروڑ روپے کا ٹول ٹیکس گھوٹالہ ہوا ہے. انہوں نے ایک کمپنی کو 1200 کروڑ سے زیادہ کا ٹینڈر دیا۔ اس کمپنی نے پہلے سال پیسے دیے لیکن اس کے بعد پیسے دینا بند کر دیے۔ پیسے نہ دینے کے باوجود بی جے پی ان سے ٹول وصولی کرواتی رہی۔ اس کے بعد، 2021-2022 میں، انہوں نے ایک نئی کمپنی کو ٹینڈر کیا۔ جو ٹینڈر پہلی کمپنی کو 1200 کروڑ روپے میں دیا گیا تھا، وہی ٹینڈر دوسری کمپنی کو صرف 700 کروڑ روپے کا دیا گیا۔ سب سے بدقسمتی کی بات یہ ہے کہ دونوں بہنیں کمپنیاں ہیں۔ جب ہم نے اعداد و شمار کو جوڑا تو تقریباً 6 ہزار کروڑ کا گھوٹالہ سامنے آیا۔ دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے ایل جی کو خط لکھاتھا اس کے ساتھ ہی کیس سے متعلق تمام دستاویزات بھی ایل جی کو دے دی گئیں۔ انہوں نے اس معاملے کی تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا۔ آج تقریباً ڈھائی ماہ ہو گئے لیکن ایل جی نے انکوائری کا حکم تک نہیں دیا۔ خط کے بارے میں جو اعتراف بھی لکھا ہے، ایل جی نے بھی نہیں دیا۔ انہوں نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ اس گھوٹالے میں بی جے پی کا ایک بہت ہی سینئر لیڈر ملوث ہے۔ شاید اسی لیے LG تحقیقات کا حکم نہیں دے رہے ہیں۔ آج دہلی کے لوگوں کے سامنے میں بی جے پی سے ایک سوال پوچھنا چاہتا ہوں کہ اس معاملے میں بی جے پی کا کون سا سینئر لیڈر ملوث ہے؟ایل جی صاحب کس لیڈر کو تحقیقات سے روک رہے ہیں؟ دہلی کے لوگوں کی کار سے کمائی ہوئی رقم جو کہ تقریباً 6 ہزار کروڑ روپے ہے، لوٹ لی گئی ہے۔ ایل جی صاحب روزانہ صبح اٹھتے ہیں اور عام آدمی پارٹی کے خلاف نئی انکوائری کا حکم دیتے ہیں۔ جب تحقیقات میں کچھ نہ ملے تو نئی تحقیقات کا حکم دیدے تے ہیں ۔اب تک وہ عام آدمی پارٹی کے خلاف کئی تحقیقات کر چکے ہیں لیکن کسی میں بھی کچھ نہیں ملا۔ اس کے باوجود، ہم ان کی تمام تحقیقات کا خیرمقدم کرتے ہیں، لیکن ایل جی صاحب کو 6 ہزار کروڑ کے گھوٹالے کی بھی جانچ کرنی چاہیے۔ وہ تحقیقات سے کیوں بھاگ رہے ہیں؟

Related posts

ڈاکٹر نوہیرا شیخ کا حیدر آباد لوک سبھا سیٹ حلقہ میں روڈ شو

www.samajnews.in

دہلی فسادات: نفرت انگیز تقاریر، تشدد اور فیس بک لائیو، اہم شخصیات کی ’زہر فشانی‘ پر تماش بین بنا رہا سسٹم

www.samajnews.in

پارٹی کے اندر اختلافات سے فلور ٹیسٹ نہیں کرایا جاسکتا: سپریم کورٹ

www.samajnews.in