33.1 C
Delhi
جولائی 25, 2024
Samaj News

صبح خالی پیٹ چائے پیتے ہیں تو ہوجائیں ہوشیار! نہیں تو….

نئی دہلی، سماج نیوز: بہت سے لوگ ایسے ہیں جنہیں بستر سے اٹھنے سے پہلے ایک کپ چائے پینے کی عادت ہوتی ہے۔ ساتھ ہی ان لوگوں کا شمار بھی کیا جائے جو صبح چائے پیتے ہیں، اس کے ساتھ کچھ ناشتہ یا ناشتہ نہیں لیتے۔ اس طرح خالی پیٹ چائے پینا صحت کے ساتھ سمجھوتہ کرنے والا ثابت ہو سکتا ہے۔ چائے پینے کا ایک صحیح طریقہ بھی ہے، جسے ذہن میں نہ رکھا جائے تو میٹابولزم اور ہاضمہ متاثر ہوتا ہے۔ یہاں جانیں وہ کون سی وجوہات ہیں جن کو ذہن میں رکھتے ہوئے خالی پیٹ چائے پینے سے گریز کرنا چاہیے۔ خالی پیٹ چائے پینے سے جسم میں پانی کی کمی ہو سکتی ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ اگر آپ چائے کے ساتھ کچھ نہ کھائیں تو جسم میں پانی کی کمی ہو جاتی ہے کیونکہ رات بھر سونے کے بعد جسم میں پانی کی کمی ہو جاتی ہے۔ اس کے اوپر خالی چائے پینا پانی کی کمی کو بڑھاتا ہے اور قبض کا باعث بھی بنتا ہے۔ چائے پیٹ کے سیالوں کے ایسڈ بیس اور الکلائن توازن کو بھی متاثر کرتی ہے، جو تیزابیت کا باعث بنتی ہے۔ اس کے علاوہ تیزابیت یا ایسڈ ریفلکس کی وجہ سے بھی سینے میں جلن ہوتی ہے۔ دل کی جلن تیزاب اور چائے کے ردعمل سے ہوتی ہے۔ خالی پیٹ چائے پینے سے جسم دیگر غذائی اجزاء کو صحیح طریقے سے جذب کرنے سے قاصر ہو جاتا ہے۔ جس کی وجہ سے جسم میں کئی طرح کے غذائی اجزا کی کمی ہو سکتی ہے اور انسان مختلف قسم کی بیماریوں کا شکار بھی ہو سکتا ہے۔ روزانہ خالی پیٹ چائے پینے سے انسان بھی اس کا عادی ہو جاتا ہے۔ روزانہ ضرورت سے زیادہ چائے پینے سے جسم میں زہریلے مادوں کی مقدار بڑھ جاتی ہے جس سے جلد سے متعلق کئی مسائل بھی جنم لیتے ہیں۔آپ چائے کے ساتھ کچھ ناشتہ یا اسنیکس وغیرہ لیں۔ اس کی وجہ سے چائے پینے کے بعد آپ کو پیاس لگے گی اور آپ پانی پیتے رہیں گے، اس سے جسم میں پانی کی کمی نہیں ہوگی یا یوں کہہ لیں کہ پانی کی کمی نہیں ہوگی۔ اس کے علاوہ دودھ کی چائے پینے کے بجائے ہربل چائے پی سکتے ہیں۔

Related posts

بھارت کی تمام جانچ ایجنسیوں نے ہیرا گروپ کی تفتیش کرلی

www.samajnews.in

عدالت نے کم وبیش لڑکیوں کے نقطہ کو تسلیم کیا: سنجے ہیگڑے

www.samajnews.in

الوداع نیتا جی

www.samajnews.in