41.1 C
Delhi
مئی 29, 2024
Samaj News

الوداع نیتا جی

نم آنکھوں سے لوگوں نے اپنے نیتا جی کو کہا الوداع

اکھلیش یادو نے ان کی چتا کو کیا روشن

سرکاری اعزاز کیساتھ ادا کی گئی آخری رسومات

آخری دیدار کے وقت جذباتی ہوئے اعظم خان

نئی دہلی، سماج نیوز:سماجوادی پارٹی کے سرپرست اور اترپردیش کے سابق وزیر اعلیٰ ملائم سنگھ یادو کی آخری رسومات ان کے آبائی گاؤں سیفئی میں ادا کر دی گئیں۔ ان کی میت کو صبح 10 بجے سے آخری دیدار کے لئے سیفئی کے نمائش میدان میں رکھی گئی تھی۔ملائم سنگھ یادو کی آخری رسومات سرکاری اعزاز کے ساتھ ادا کی گئیں اور سماجوادی پارٹی کے سربراہ اور ملائم سنگھ کے بیٹے اکھلیش یادو نے ان کی چتا کو روشن کیا۔ سماجوادی لیڈر کو جب آخری سفر پر لے جایا جا رہا تھا تو ان کے ساتھ لوگوں کا ایک سمندر گامزن تھا۔ اس دوران ’ملائم سنگھ یادو امر رہیں‘، ’نیتا جی امر رہیں‘ اور ’دھرتی پوتر امر رہیں‘ کے نعرے گونج رہے تھے۔ لوگ نیتا جی کی ایک جھلک پانے کیلئے بے تاب تھے اور کئی لوگ تو آخری دیدار کے لئے درختوں پر بھی چڑھ گئے۔ جس گاڑی سے ملائم سنگھ یادو کا جسد خاکی لے جایا جا رہا تھا اس پر اکھلیش یادو کے علاوہ دیگر اہم شخصیات بھی نظر آئیں۔ ان کے آخری دیدار کیلئے صبح سے ہی سیفئی میں حامیوں کی بھیڑ امنڈ پڑی تھی۔مرکزی وزیر راجناتھ سنگھ ، راجستھان کے وزیر اعلیٰ اشوک گہلوت، چھتیس گڑھ کے وزیر اعلیٰ بھوپیش بگھیل، این سی پی سربراہ شرد پوار اور بالی ووڈ اداکار ابھیشیک بچن کیساتھ ان کی ماں اور ایس پی سے راجیہ سبھا رکن جیا بچن بھی سیفئی میں واقع انتیوشٹی استھل پہنچی تھیں ۔ اس دوران ملائم سنگھ کے آخری دیدار کیلئے پہنچے بی جے پی ممبر پارلیمنٹ ورون گاندھی سے لپٹ کر اکھیلیش یادو رو پڑے۔ ملائم سنگھ یادو کے آخری دیدار کیلئے جہاں عوامی سیلاب امنڈ پڑا تو وہیں بہو ڈمپل، اپرنا اور اور بھتیجے دھرمیندر یادو پھوٹ پھوٹ کر روتے نظر آئے ۔ ان کے مداحوں اور حامیوں کی بھی آنکھیں نم تھیں۔ سیفئی کے میلا گراؤنڈ پر عالم یہ تھا کہ لوگ نیتاجی زندہ آبادہ کے نعرے لگا رہے تھے۔ ملک اور ریاست سے بھاری تعداد میں ملائم سنگھ یادو کے حامی اور ان کے چاہنے والے سیفئی پہنچے تھے۔ سیفئی میں پاؤں رکھنے کیلئے جگہ نہیں تھا۔ نیتاجی کے اہل خانہ کا رو رو کر برا حال ہے ۔ پورے کنبہ پر غم کا پہاڑ ٹوٹ پڑا ہے ۔ کنبہ کے لوگ نیتاجی کو یاد کرکے رو رہے ہیں ۔ لوگوں کے آنسو تھمنے کا نام نہیں لے رہے ہیں۔ انہیں نم آنکھوں سے یاد کیا جارہا ہے ۔ ایک طرف کنبہ کی خواتین کے درمیان ڈمپل پھوٹ پھوٹ کر روتی نظر آرہی ہیں تو دوسری طرف دھرمیندر بھی خود کو روک نہیں سکے اور پھوٹ پھوٹ کر رو پڑے۔پورے کنبہ میں ماتم کی صف بچھی ہوئی ہے ۔ پیر کی صبح نیتاجی کی موت کے بعد سے ہی اکھیلیش یادو ان کے ساتھ ہیں ۔ ان کی آنکھیں نم ہیں مگر وہ حامیوں کا حوصلہ بڑھاتے بھی نظر آ رہے ہیں۔سماجوادی کے سینئر لیڈر اور قومی جنرل سکریٹری اعظم خان بھی آج اتر پردیش کے سابق وزیر اعلیٰ اور سماجوادی پارٹی کے بانی ملائم سنگھ یادو کے آخری دیدار کیلئے پہنچے۔ اس دوران وہ بہت جذباتی ہو گئے۔ ان کیساتھ ان کا بیٹا عبداللہ اعظم بھی موجود تھے۔ اعظم خان کے آتے ہی ملائم سنگھ کا پورا خاندان جذباتی ہو گیا۔ خیال رہے کہ ملائم سنگھ یادو کا پیر کے روز انتقال ہو گیا تھا۔ 82 سالہ سماجوادی لیڈر کا علاج گڑگاؤں کے میدانتا اسپتال میں چل رہا تھا اور آئی سی یو میں زیر علاج تھے۔

Related posts

ہماچل پردیش: کانگریس کا انتخابی منشور جاری،ایک لاکھ نوکری اور پرانی پنشن اسکیم کا وعدہ

www.samajnews.in

ہماری پارٹی جمہوریت کی بنیاد پر بھارتی قانون کے مطابق کام کریگی: نوہیرا شیخ

www.samajnews.in

کانگریس نے 2024کیلئے بجایا بگل، بی جے پی کو اقتدار سے کریں بے دخل

www.samajnews.in